چاڈ:نسلی فسادات پر 2مشرقی صوبوں میں ایمرجنسی نافذ

دنیا
4
0
sample-ad

انجامینا(اے ایف پی)افریقی ملک چاڈ کے صدر ادریس دیبی نے دو مشرقی صوبوں میں نسلی فسادات کے نتیجے میں درجنوں افراد کی ہلاکت کے باعث ایمرجنسی نافذ کردی۔صدارتی دفتر کے مطابق سیلا اور اوادای کے علاقوں میں آئندہ 3 ماہ تک ایمرجنسی نافذ رہے گی۔خیال رہے کہ سیلا اور اوادای کے علاقوں میں 9 اگست سے چرواہوں اور کسانوں کے درمیان جھڑپوں کے نتیجے میں 50 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔صدر ادریس دیبی نے سیلا کے دورے کے دوران کہا کہ ‘ اب سے ہم ملٹری فورسز تعینات کریں گے جو علاقے میں موجود افراد کی حفاظت کو یقین بنائیں گی۔انہوں نے کہا کہ ان تمام شہریوں سے اسلحہ لینے کی ضرورت ہے ۔

sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.