سوڈان:سابق صدر عمرالبشیر کی پنجرے میں عدالت پیشی

دنیا
7
0
sample-ad

خرطوم(رائٹرز،اے ایف پی)سابق صدر کو گزشتہ روز خرطوم کی عدالت میں لوہے کے پنجرے میں بند کر کے پیش کیاگیا ۔سابق صدر کے خلاف کرپشن کیس کی تفتیش کرنے والی تفتیشی ٹیم کے رکن بریگیڈیئر جنرل احمد علی محمد نے کہا سابق صدر نے بتایاہے کہ انہوں نے سعودی ولی عہد محمد بن سلمان سے 2 کروڑ 50 لاکھ ڈالر وصول کئے ۔ سابق صدر نے تفتیشی ٹیم کو یہ بھی بتایا کہ انہیں سابق سعودی فرمانروا شاہ عبداللہ سے دو مختلف مواقع پر 6 کروڑ 50 لاکھ ڈالر ملے تھے ۔سابق صدر کے وکیل احمد ابراہیم نے کہاکہ اس الزام میں کوئی صداقت نہیں ۔عدالت نے کیس کی سماعت 24 اگست تک ملتوی کردی۔پیشی کے موقع پر جج نے جب سابق صدر سے ان کا نام، عمر اور ایڈریس پوچھا تو انہوں نے مسکراتے ہوئے کہا اس سے پہلے ان کی رہائش آرمی ہیڈکوارٹرز میں ضلع ایئرپورٹ میں تھی لیکن اب کووہ قید خانہ میں ہیں۔واضح رہے کہ 75سالہ عمر البشیر 30 سال تک سوڈان کے حکمران رہے انہیں رواں سال اپریل میں برطرف کر کے فوج نے حکومت سنبھال لی ۔دوسری طرف سوڈان کی عبوری حکومت چلانے کیلئے خودمختار کونسل کا اعلان 48 گھنٹوں کیلئے ملتوی کیا گیا ۔ عمر البشیر پیشی

sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.