13

اسٹاک ایکسچینج : 39500 کی حد بحال , 43 ارب کا منافع

کراچی (بزنس رپورٹر)منافع بخش شعبے متحرک ‘کے ایس ای 100انڈیکس میں 237پوائنٹس کا اضافہ ‘ مجموعی سرمایہ 79کھرب70ارب روپے ہوگیا،کاروباری حجم 24.23 فیصدکم رہا کے ایس ای 30انڈیکس میں 171.26، آل شیئرز انڈیکس میں 229.65پوائنٹس کی تیزی ‘340کمپنیوں کا کاروبار ‘47.64فیصد حصص کی قیمتیں بڑھ گئیں
پاکستان سٹاک ایکسچینج میں پیرکو تیزی رہی ،کے ایس ای100انڈیکس کی 39400 اور 39500 کی نفسیاتی حد یں بحال ہوگئیں جبکہ سرمایہ کاری مالیت میں43ارب75 کروڑ روپے سے زائد کا اضافہ ہوا ،کاروباری حجم 19.68 فیصد کم جبکہ 47.64 فیصد حصص کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔حکومتی مالیاتی اداروں مقامی بروکریج ہاؤسزاور دیگر انسٹیٹیوشنز کی جانب سے توانائی، فوڈز، بینکنگ، کیمیکلز اور دیگرمنافع بخش سیکٹرز میں خریداری کے باعث پیر کو کاروبار کا آغاز مثبت زون میں ہوا۔ ٹریڈنگ کے دوران ایک موقع پر 100 انڈیکس39812پوائنٹس کی بلندسطح پر بھی ریکارڈ کیاگیا،تاہم فروخت کے دباؤ اور پرافٹ ٹیکنگ کے باعث مقامی سرمایہ کار گروپوں نے اپنے حصص فروخت کرنے کو ترجیح دی جس کے نتیجے میں کے ایس ای 100 انڈیکس مذکورہ سطح پر برقرار نہ رہ سکاتاہم تیزی کا سلسلہ سارا دن جاری رہا۔مارکیٹ کے اختتام پر کے ایس ای100انڈیکس237پوائنٹس کے اضافے سے 39543پوائنٹس پر بندہوا۔اسی طرح کے ایس ای 30 انڈیکس 171.26پوائنٹس کے اضافے سے 18928 پوائنٹس جبکہ کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 229.65 پوائنٹس کے اضافے سے 29078.86 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مجموعی طور پر340کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا جن میں سے 162کمپنیوں کے حصص کے بھاؤمیں اضافہ،158میں کمی جبکہ 20 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں استحکام رہا۔سرمایہ کاری مالیت میں 43 ارب 75 کروڑ 24 لاکھ روپے کااضافہ ریکارڈ کیاگیا جس کے نتیجے میں سرمایہ کاری کی مجموعی مالیت بڑھ کر 79 کھرب 70 ارب25کروڑ روپے ہو گئی۔ پیر کو مجموعی طور پر 12 کروڑ 44 لاکھ 90 ہزار 620 شیئرز کا کاروبار ہوا، جو جمعہ کی نسبت 3 کروڑ 5 لاکھ 10 ہزار 530 شیئرزکم ہیں۔قیمتوں کے اتار چڑھاؤ کے حساب سے نیسلے پاکستان کے حصص سرفہرست رہے، جس کے حصص کی قیمت131روپے اضافے سے 8031 روپے اورانڈس موٹرزکے حصص کی قیمت 53.98 روپے اضافے سے 1243.78روپے پر بند ہوئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں