بین الاقوامی خبریں

شام:الباب میں داعش کے 2 خودکش بم حملے,70 افراد ہلاک

دمشق ،الباب(رائٹرز،نیوزایجنسیاں،مانیٹرنگ ڈیسک)ایک حملہ آورنے بارود بھری گاڑی کیمپ سے ٹکرادی،100ز خمی،بارودی سرنگ پھٹنے سے 2ترک فوجی مارے گئےشام میں داعش کے 2خودکش بم حملوں میں 70 افراد ہلاک اور100سے زائد ز خمی ہوگئے ۔ میڈیارپورٹس کے مطابق شام کے شورش زدہ شہرالباب کے شمالی علاقوں میں داعش کے خود کش حملوں میں 70 افراد ہلاک ہو گئے جن میں اکثریت شہریوں کی ہے ۔دریں اثنا الباب میں داعش کی نصب کردہ بارودی سرنگوں کی صفائی کے دوران دھماکے سے 2ترک فوجی ہلاک اور3زخمی ہوگئے ۔مہر خبر ایجنسی کے مطابق داعش کے ایک خود کش حملہ آور نے بارود سے بھری گاڑی حکومت کے حامی باغیوں کے کیمپ سے ٹکرا دی۔ دہشت گردوں کی جانب سے سوسیان گاؤں میں آزاد شامی فوج کے ہیڈ کوارٹر ز کو ہدف بناکرکئے جانیوالے ایک حملے میں سوسے زائد افراد کے زخمی ہونے کی بھی اطلاعات ہیں۔ہیڈ کوارٹرز پر حملے کی کوشش میں ناکامی پر دہشت گردوں نے بم والی گاڑی کو شہریوں کے بیچ میں لاکر اڑا دیا جس سے جانی نقصان ہوا۔

 

بین الاقوامی

سعودی شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے امریکی سینیٹر جان مکین کی ملاقات

ریاض :سعودی شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے امریکی سینیٹر جان مکین نے ملاقات کی ہے ، جس میں دونوں ملکوں کے درمیان دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔سعودی شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے امریکی سینیٹر جان مکین نے ملاقات کی ہے ، جس میں دونوں ملکوں کے درمیان دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق سعودی عرب کے شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے الیمامہ میں امریکی سینیٹ کے سینئر رکن اور سابق شکست خوردہ صدارتی امیدوار جان مکین نے ملاقات کی ہے اور ان سے دونوں ملکوں کے درمیان دو طرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا ہے ۔

فلسطینی نوجوان کو مارنے والے اسرائیلی فوجی کو 18 ماہ قید

مقبوضہ بیت المقدس (خبرایجنسیاں ) فلسطینی نوجوان کو مارنے والے اسرائیلی فوجی کو 18 ماہ قید کی سزا سنائی گئی ہے ۔ سارجنٹ ایلور اذاریا نے پچھلے سال نوجوان عبدالفتاح الشریف کو گولی مار کر شہید کردیا تھا۔جج مایا ہیلر کا کہنا ہے کہ جرم کی شدت کی کمی کی وجہ اسرائیلی فوجی کا پہلا جرم ملازمت میں ہونا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایک زخمی فلسطینی حملہ آور کو شہید کرنے کے جرم میں ایک اسرائیلی فوجی کو 18 ماہ قید کی سزا سنائی گئی ہے ۔اس اسرائیلی فوجی کے معاملے میں ملک بھر میں رائے منقسم ہے ۔ سارجنٹ ایلور کو گزشتہ برس مارچ میں مقبوضہ غرب اردن میں 21 سالہ نوجوان عبدالفتاح الشریف کو گولی مار کر شہید کرنے کا مجرم قرار دیا گیا ہے ۔ ایلور نے فلسطینی شخص کو گولی مارنے سے پہلے اپنے ساتھیوں سے کہا تھا کہ ایک دوسرے اسرائیلی فوجی کو چاقو مارنے والا عبدالفتاح مارے جانے کا مستحق ہے ۔ اسرائیلی فوجی سربراہان نے ان کے اس اقدام کی مذمت کی تھی لیکن دیگر افراد نے اس کو سراہا تھا۔ اس جرم میں 20 برس تک کی قید کی سزا سنائی جا سکتی ہے لیکن استغثیٰ نے اذاریا کے لیے تین سے پانچ سال کی سزا کی درخواست کی تھی ، اذاریا کے عہدے میں کمی کرنے کا بھی حکم دیا گیا تاہم جس وقت سزا سنائی جا رہی تھی تو وہ مسکرا رہے تھے ۔ جج مایا ہیلر نے کہا کہ ان کے جرم کی شدت اس وجہ سے کم ہو گئی تھی کہ یہ ان کا پہلا جرم تھا اور یہ ان کی فوجی ملازمت کے درمیان پیش آیا اور یہ کہ اس بارے میں واضح ہدایات نہیں تھیں کہ انہیں کیا کرنا چاہیے تھا۔اسرائیلی وزیرِ اعظم بنیامین نیتن یاہو نے کہا تھا کہ وہ اذرایا کی معافی کے لیے ہر فیصلے کی حمایت کریں گے ۔عدالت نے اذاریا کا یہ دعویٰ مسترد کر دیا تھا کہ انہیں اس خوف میں گولی چلانی پڑی کہ کہیں عبدالفتاح نے دھماکا خیز جیکٹ نہ پہنی ہو۔

چار ممالک میں قحط 14 لاکھ بچوں کی جان لے سکتا ہے ، یونیسیف

نیویارک: یونیسیف نے کہا ہے کہ چار ممالک میں قحط 14 لاکھ بچوں کی جان لے سکتا ہے ، نائیجیریا، صومالیہ، جنوبی سوڈان اور یمن میں قحط کی وجہ سے ہلاکتوں کا خدشہ ہے ،عالمی برادری فوری اقدامات کرے تاکہ بہت سی زندگیوں کو بچایا جا سکے ۔یونیسیف نے کہا ہے کہ چار ممالک میں قحط 14 لاکھ بچوں کی جان لے سکتا ہے ، نائیجیریا، صومالیہ، جنوبی سوڈان اور یمن میں قحط کی وجہ سے ہلاکتوں کا خدشہ ہے ،عالمی برادری فوری اقدامات کرے تاکہ بہت سی زندگیوں کو بچایا جا سکے ۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق اقوام متحدہ کے ادارہ برائے اطفال یونیسیف نے خبردار کیا ہے کہ چار ممالک نائیجیریا، صومالیہ، جنوبی سوڈان اور یمن میں قریب ایک اعشاریہ چار ملین بچے قحط کی وجہ سے ہلاک ہو سکتے ہیں ۔ یونیسیف کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ یمن میں چار لاکھ باسٹھ ہزار بچے خوراک کی شدید کمی سے دوچار ہیں ، جب کہ شمال مشرقی نائیجیریا میں بھی قریب ساڑھے چار لاکھ بچے بھوک سے متاثرہ ہیں ۔ قحط سے متعلق تنبیہ کے نظام Fews کے مطابق نائیجیریا کی ریاست بورنو میں گزشتہ برس سے قحط جاری ہے ، جب کہ امدادی اداروں کی ان متاثرہ بچوں تک عدم رسائی سے صورت حال مزید گمبھیر ہو سکتی ہے ۔ یونیسف کے ڈائریکٹر انتھونی لیک نے عالمی برادری سے اپیل کی ہے کہ وہ اس سلسلے میں فوری اقدامات کریں ، تاکہ بہت سی زندگیوں کو بچایا جا سکے ۔

ڈوبنے والے 74 مہاجرین کی لاشیں لیبیا کے ساحل پر پہنچ گئیں

طرابلس (خبرایجنسیاں) سمندر میں ڈوبنے والے 74 مہاجرین کی لاشیں لیبیا کے ساحل پر پہنچ گئی ہیں، لاشیں اُن مہاجرین کی ہیں جو گزشتہ دو دنوں کے دوران سمندر میں ڈوبے ، جبکہ ہلاک افرادصحارا کے افریقی ممالک سے تعلق رکھنے والے باشندے تھے ۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق یورپ پہنچنے کی کوشش میں سمندر میں ڈوب کر ہلاک ہونے والے 74 مہاجرین کی لاشیں بہہ کر لیبیا کے مغربی شہر زاویہ کے ساحل پر پہنچ گئیں۔ یہ بات ہلال احمر کے ایک اہلکار کی جانب سے منگل کو بتائی گئی ہے ۔ محمد المصراتی کے مطابق پیر کے روز ملنے والی یہ لاشیں اُن مہاجرین کی ہیں جو گزشتہ دو دنوں کے دوران سمندر میں ڈوبے ۔ یہ لاشیں سب صحارا کے افریقی ممالک سے تعلق رکھنے والے باشندوں کی ہیں۔ افریقہ سے تعلق رکھنے والے ایسے مہاجرین کے لیے لیبیا کا ساحلی علاقہ انتہائی اہمیت رکھتا ہے جو سمندر پار کر کے یورپ میں داخل ہونے کے خواہشمند ہوں۔

بین الاقوامی خبریں

روس بھارت کو2018تک 200 فوجی ہیلی کاپٹر فراہم کرے گا

ماسکو(مانیٹرنگ ڈیسک)روس کے ہیلی کاپٹر تیار کرنیوالے سرکاری ادارے کے چیف ایگزیکٹو نے 2018 تک بھارت کو 200 جنگی ہیلی کاپٹر فراہم کرنے کا اعلان کردیا۔میڈیا رپورٹ کے مطابق بھارت اور روس کے درمیان گزشتہ سال اکتوبر میں بھارتی فوج کیلئے 200’’کے اے 226ٹی ‘‘ہیلی کاپٹر تیارکرنے کا معاہدہ ہواتھا۔ کمپنی کے سی ای او کا کہناتھا 200 میں سے 60 ہیلی کاپٹر بھارت پہنچائے جائیں گے جبکہ 140 کو بھارت میں ہی تیار کیا جائے گا۔

افغانستان:گھرپردستی بموں سے حملہ ،بچوں سمیت11ہلاک

کابل(نیوزایجنسیاں)افغانستان میں دستی بموں کے حملے میں بچوں اور خواتین سمیت 11شہری ہلاک ہوگئے۔افغان میڈیا کے مطابق صوبہ لغمان کے ضلع بدپاکھ میں نامعلوم مسلح افراد نے ایک گھر پر دستی بم پھینکے جس کے نتیجے میں ایک ہی خاندان کے 11افراد ہلاک اور3زخمی ہو گئے ۔ صوبائی گورنر کے ترجمان سرحدی زواک کا کہنا ہے کہ رات کے وقت حملہ آوروں نے بندوقوں اور دستی بموں کے ساتھ ایک گھر پر اس وقت دھاوا بول دیا جب مکین کھانا کھانے میں مصروف تھے ۔ابھی تک کسی نے اس حملے کی ذمہ قبول نہیں کی۔

امریکا عراق میں تیل پر قبضہ کرنے نہیں آیا، امریکی وزیردفاع

ٹرمپ نے جنوری میں اپنے خطاب میں کہا تھا ہمیں عراق کا تیل رکھ لینا چاہیے بغداد (خبرایجنسیاں) امریکی وزیر دفاع نے کہا ہے کہ امریکا عراق میں تیل پر قبضہ کرنے نہیں آیا، افغانستان میں امریکی فوجیوں کی تعداد کے بارے میں صدرکو جلد تجویز دونگا جبکہ امریکی صدر ٹرمپ نے جنوری میں اپنے خطاب میں کہا تھا کہ ہمیں عراق کا تیل رکھ لینا چاہیے ۔ امریکا کے وزیر دفاع جم میٹس پیر کو عراق کے غیر اعلانیہ دورے پر بغداد پہنچے ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ امریکی فوج عراق کے تیل پر قبضہ کرنے کیلئے یہاں نہیں آئی۔ جسکا مقصد امریکی حمایت یافتہ عراقی فورسز کی شدت پسند تنظیم داعش کیخلاف جاری کوششوں کا جائزہ لینا اور اس بارے میں حکمت عملی پر تبادلہ خیال کرنا ہے ۔ عراق ان ملکوں میں شامل ہے جن کے شہریوں پر صدر ٹرمپ نے عارضی پابندی کا اعلان کیا تھا۔ ٹرمپ نے جنوری میں سی آئی اے کے دفتر کے دورے کے موقع پر خطاب میں کہا تھا کہ ہمیں ان (عراق) کا تیل رکھ لینا چاہیے ۔ انہوں نے یہ بات داعش کی طرف سے عراقی تیل سے حاصل ہونیوالی آمدنی کو روکنے کے تناظر میں کہی تھی ۔ میٹس نے کہا کہ امریکا میں لوگ عموماً تیل اور گیس کیلئے رقم ادا کرتے ہیں اور میرا خیال مستقبل میں بھی ایسا ہی ہو گا۔

سینئر امریکی سینیٹرز نے ٹرمپ کی اہلیت پر سوالات اٹھا دیئے

،  واشنگٹن (خبر ایجنسیاں) ری پبلکن پارٹی کے دو اہم سینیٹرز نے اتوار کو امورِ خارجہ سے متعلق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی اہلیت پر سوال اٹھائے ہیں، جن میں خصوصی طور پر قومی سلامتی کے امور سے نمٹنے کی وائٹ ہائوس کی استعداد اور امریکی صدارتی انتخابات میں روسی مداخلت کے معاملے پر اقدام لینے سے انکار کا معاملہ شامل ہے ۔ ایریزونا سے تعلق رکھنے والے سینیٹر جان مکین نے ، جنہیں 2008ء میں صدارتی امیدوار کے طور پر شکست کا سامنا رہ چکا ہے ، این بی سی کے میٹ دی پریس پروگرام کو بتایا کہ وہ امور خارجہ کے معاملات کو پرکھنے کی ٹرمپ کی صلاحیت اور متضاد مؤقف اختیار کرنے پر پریشان ہیں۔ بقول اُن کے میرے خیال میں امیگریشن اصلاحات کا آغاز ایک مثال کی حیثیت رکھتا ہے ، وائٹ ہائوس کو فیصلہ سازی میں نظم و ضبط اپنانے کی ضرورت ہے ۔ میں یہ سمجھتا ہوں کہ اس وقت یہی ایک کمی ہے جس سے ہمیں سابقہ ہے ۔ ٹرمپ نے نیٹو اتحاد کے بارے میں اپنے اظہار خیال اور عزم پر یورپی اتحادیوں کو پریشانی میں ڈال دیا ہے ، حالانکہ نائب صدر مائیک پینس نے ہفتہ کو میونخ میں منعقدہ سلامتی اجلاس کو بتایا کہ امریکا روس کا احتساب لے گا اور نیٹو کی حمایت میں پُرعزم ہے ۔ یورپی سربراہان کے بارے میں مکین نے کہا کہ وہ پہیلیاں بوجھ رہے ہیں اور پریشان ہیں۔ مکین نے امریکی انٹیلی جنس برادری کی جانب سے برآمد کردہ نتائج کی چھان بین کے لیے وسیع تر کانگریس کی تفتیش کا مطالبہ کیا ہے ، جسے روس مسترد کر چکا ہے کہ روس نے نومبر کے انتخابات کے دوران سابقہ امریکی وزیر خارجہ اور ڈیموکریٹ پارٹی کی صدارتی امیدوار ہلیری کلنٹن کی انتخابی مہم کے کمپیوٹر کو ہیک کیا ہے۔

دینا کی خبریں

صومالیہ میں کار بم دھماکا، 20افراد ہلاک، 50زخمی

موغادیشو (خبر ایجنسیاں) صومالیہ میں کار بم دھماکے میں 20 افراد ہلاک، 50 زخمی ہو گئے ، حملہ ایک کار کے ذریعے کیا گیا جہاں لوگوں کی بڑی تعداد مارکیٹ میں موجود تھی، دھماکا شدت پسند تنظیم الشباب کے حکومت کے خلاف جنگ جاری رکھنے کے اعلان کے چند گھنٹے بعد ہوا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق افریقی ملک صومالیہ کے دارالحکومت موغا دیشو میں ہونے والے کار بم دھماکے میں 20 افراد ہلاک اور 50زخمی ہو گئے ۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مقامی حکام نے بتایا کہ دھماکا موغا دیشو کے ایک معروف کاروباری مرکز کے باہر ہوا۔ ڈسٹرکٹ کمشنر احمد عبداللہ نے بتایا کہ دھماکا ایک کار کے ذریعے اس وقت کیا گیا جب لوگوں کی بڑی تعداد مارکیٹ میں موجود تھی۔ دھماکے میں زخمی ہونے والے ایک قصائی نے بتایا کہ کوئی اپنی گاڑی کپڑوں کی دکان کے سامنے کھڑی کر کے گیا تھا جس کے تھوڑے ہی دیر بعد دھماکا ہوگیا۔ واضح رہے کہ صومالیہ میں 8 فروری کو محمد عبداللہ محمد صدر منتخب ہوئے تھے اور ان کے منتخب ہونے کے بعد صومالیہ میں ہونے والا یہ پہلا بڑا حملہ ہے ۔ یہ دھماکا صومالیہ میں سرگرم شدت پسند تنظیم الشباب کی جانب سے نو منتخب صدر کو لادین قرار دیتے ہوئے ان کی حکومت کے خلاف جنگ جاری رکھنے کے اعلان کے چند گھنٹے بعد ہوا۔

سعودی عرب اور اسرائیل کی ایران پر شدید تنقید

میونخ (دنیا ڈیسک) سعودی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ دنیا بھر میں دہشت گردی کا مرکزی اسپانسر ایران ہے جبکہ اسرائیلی وزیر دفاع نے کہا ہے کہ مشرق وسطیٰ میں ایران کا حتمی ہدف سعودی عرب کو کمزور کرنا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق جرمنی میں ہونے والی میونخ سیکیورٹی کانفرنس کے دوران اسرائیل اور سعودی عرب نے ایران کی شدید مخالفت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران ملک مشرق وسطیٰ میں عدم استحکام پیدا کر رہا ہے ۔ اسرائیلی وزیر دفاع نے کہا کہ مشرق وسطیٰ میں ایران کا حتمی ہدف سعودی عرب کو کمزور کرنا ہے ، ایران کو خطے میں انتہا پسند عناصر کو ختم کرنے کے لیے سعودی عرب کے ساتھ مذاکرات کرنے چاہئیں، ایران کا مقصد مشرق وسطیٰ کے ہر ملک میں استحکام کو کمزور کرنا ہے اور آخر کار اس کی آخری منزل سعودی عرب ہے ، اصل تقسیم مسلمانوں اور یہودیوں میں نہیں بلکہ اعتدال پسندوں اور بنیاد پرستوں میں ہے ۔ اسی سیکیورٹی کانفرنس میں سعودی وزیر خارجہ عادل بن الجبیر نے بھی ایران پر شدید تنقید کی ۔ ان کا الزام عائد کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ایران دنیا بھر میں دہشت گردی کا مرکزی اسپانسر ہے ، ایران مشرق وسطیٰ میں عدم استحکام پیدا کر رہا ہے اور وہ انہیں تباہ کرنا چاہتا ہے ، مشرق وسطیٰ میں امن ختم کرنے کے لیے پرعزم ہے اور جب تک ایران اپنے رویے تبدیل نہیں کرے گا تب تک اس طرح کے ملک کے ساتھ نمٹنا بہت مشکل ہے ، ایران شام اور خطے کے متعدد تشدد گروہوں کے علاوہ حوثی باغیوں کی مالی امداد جاری رکھے ہوئے ہے ۔ انہوں نے بین الاقوامی برادری سے مطالبہ کیا کہ ایرانی اقدامات کو روکنے کے لیے واضح ریڈ لائنز کی ضرورت ہے ۔

ٹرمپ سفری پابندیوں سے متعلق ’’موثر‘‘ حکم نامہ جاری کرینگے

میونخ (خبر ایجنسیاں) امریکا کی ہوم لینڈ سیکیورٹی کے وزیر جان کیلی نے کہا ہے کہ صدر ٹرمپ جلد ہی سات اکثریتی مسلم ممالک کے تارکین وطن سے متعلق جاری کردہ صدراتی حکم نامے کو ایک موثر شکل میں جاری کریں گے ، تاہم اس پر بہتر انداز میں عمل درآمد کیا جائے گا اور یہ اس بدنظمی کا سبب نہیں بنے گا جو قبل ازیں غیر ملکیوں کے امریکا میں داخلے پر پابندی عائد کرنے کے بعد دیکھی گئی ۔ جرمنی کے شہر میونخ میں سالانہ سیکیورٹی کانفرنس کے موقع پر انسداد دہشت گردی سے متعلق ہونے والے ایک مباحثے میں گفتگو کرتے ہوئے کیلی نے کہا کہ سفری پابندی سے متعلق نیا حکم نامہ گرین کارڈ کے حامل غیر ملکیوں کو امریکا میں دوبارہ داخل ہونے سے نہیں روکے گا ۔ انہوں نے مزید کہا کہ جب یہ حکم نامہ موثر ہو گا تو اس وقت امریکا میں داخل ہونے کے لیے محو سفر افراد پر بھی یہ اثر انداز نہیں ہوگا۔ کیلی نے کہا کہ ٹرمپ اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ اس سفری پابندی کے دوران غیر ممالک سے امریکا آنے والے ہمارے ہوائی اڈوں پر نہ پھنس جائیں۔ قبل ازیں سفری پابندیوں سے متعلق27 جنوری کو جاری ہونے والے صدارتی حکم نامے کو امریکا کی عدالتوں نے معطل کر دیا تھا۔ وائٹ ہاؤس کے عہدیداروں کا کہنا تھا کہ یہ ایک سیکیورٹی اقدام تھا جس کا مقصد شدت پسندوں کے حملوں کا تدارک کرنا تھا ۔ ٹرمپ کے انتظامی حکم کے تحت ایران، عراق، لیبیا، صومالیہ، سوڈان، شام اور یمن کے شہریوں پر امریکا میں داخلے پر 90 روز کی پابندی عائد کر دی گئی تھی۔

نیا کی خبریں

دہشت گردی سرحدوں کو تسلیم نہیں کرتی ، کوئی خطہ محفوظ نہیں رہیگا:افغان صدر

کابل (آئی این پی) افغانستان نے دھمکی دی ہے کہ اگر پاکستان نے سرحد پار سے گولہ باری کا سلسلہ بند نہ کیا تو اسے منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔ دوسری طرف افغانستان کے صدر اشرف غنی نے کہا ہے کہ دہشت گردی سرحدوں کو تسلیم نہیں کرتی۔ کوئی بھی خطہ محفوظ نہ رہے گا۔ جرمنی کے شہر میونخ میں سیکیورٹی کانفرنس سے خطاب میں اشرف غنی نے کہا کہ جو ممالک دہشت گردی کو ریاستی پالیسی کے طور پر استعمال کرتے ہیں انہیں تنہا کردینا چاہیے ۔ دہشت گردی سرحدوں کو تسلیم نہیں کرتی۔ اگر قابو نہ پایا گیا تو کوئی بھی اس لعنت سے محفوظ نہیں رہے گا ۔ افغانستان میں جاری لڑائی خانہ جنگی نہیں بلکہ ریاستوں کے مابین غیر اعلانیہ جنگ ہے ۔ افغان وزارت دفاع کا کہنا ہے کہ سفارت کاری کام نہ آئے تو اٖفغانستان جوابی کارروائی کا حق محفوظ رکھتا ہے ۔ وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا کہ اگر پاکستان نے گولہ باری نہ روکی تو اس کے خلاف بھرپور طاقت کا مظاہرہ کیا جائے گا ۔ وزارت خارجہ میں اسٹریٹجک اسٹڈیز کے ڈائریکٹر فرامارز تامنا کا کہنا تھا کہ ہمیں امید ہے کہ پاکستان سے حملے بند ہو جائیں گے اور دو طرفہ تعلقات معمول پر آجائیں گے ، اگر ایسا نہ ہوا تو افغانستان خاموش نہیں بیٹھے گا۔دریں اثناء اقوام متحدہ نے افغانستان کے صوبے پکتیکا میں بم دھماکے کی مذمت کی ہے ، دھماکے میں بارہ افراد ہلاک ہوئے تھے ، جن میں 8 بچے بھی شامل تھے جو اسکول سے واپس آ رہے تھے ، واقعہ اس وقت پیش آیا جب بچوں کی گاڑی سڑک پر نصب بم سے ٹکرائی تھی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق اقوامِ متحدہ نے افغانستان کے شورش زدہ صوبے پکتیکا میں سڑک کے کنارے نصب ایک بم کے پھٹنے سے بارہ افغان باشندوں کی ہلاکت کی مذمت کی ہے ۔ ان افغان باشندوں میں آٹھ بچے بھی شامل ہیں، جو اسکول سے واپس آ رہے تھے ۔ اقوامِ متحدہ کے مطابق یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب ان بچوں کی گاڑی سڑک پر نصب دیسی ساختہ بم سے ٹکرائی۔ اس حادثے میں چار افراد زخمی بھی ہوئے ۔ پکتیکا صوبے کے حکام کی جانب سے ابھی تک اس واقعہ پر کوئی ردِ عمل سامنے نہیں آیا ہے ۔امریکی وزیر دفاع جیمز میٹس نے افغانستان کا پہلا دورہ منسوخ کردیا۔ذرائع کے مطابق ابو ظہبی میں موجود امریکی وزیر دفاع کا دورہ افغانستان موسم کی خرابی کی وجہ سے منسوخ ہوا۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ افغانستان میں نئی فوجی حکمت عملی کا اعلان مقامی امریکی کمانڈر سے مشاورت کے بعد کرونگا۔انہوں نے کہا کہ میں نے ا توار کو کئی گھنٹے تک کابل میں جنرل نکلسن سے ویڈیولنک کے ذریعے بات چیت کی ہے ۔

امریکا کے ساتھ باہمی احترام پر مبنی تعلقات چاہتے ہیں، روسی وزیر خارجہ

میونخ(این این آئی)روسی وزیر خارجہ سرگئی لاؤروف نے کہا ہے کہ امریکا کے ساتھ باہمی احترام پر مبنی تعلقات چاہتے ہیں ۔میڈیا رپورٹس کے مطابق روسی وزیرِ خارجہ سرگئی لاؤروف نے کہا ہے کہ ماسکو حکومت امریکا کے ساتھ حقیقت پسندانہ تعلقات اْستوار کرنا چاہتی ہے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق سرگئی لاؤروف نے یہ بات میونخ سیکیورٹی کانفرنس میں اپنی تقریر میں کہی۔ سرگئی لاؤروف کا کہنا تھا کہ روس امریکا کے ساتھ حقیقت پسندانہ تعلقات، باہمی احترام اور عالمی استحکام کے لیے خصوصی ذمہ داری کی تفہیم چاہتا ہے ۔

 

مصری دہشت گرد شیخ عمر عبدالرحمان امریکی جیل میں دم توڑ گیا

نیو یارک: (ویب ڈیسک) خبر ایجنسی کے مطابق امریکی حکام نے شیخ عبد الرحمان کی ہلاکت کی تصدیق کر دی۔ شیخ عمر 1993 میں ورلڈ ٹریڈ سنٹر پر دہشت گرد حملوں کے الزام میں امریکی ریاست نارتھ کیرولینا کی جیل میں عمر قید کی سزا کاٹ رہے تھے۔ شیخ عمر کے گھر والوں کو امریکی حکام نے فون کال کے ذریعے شیخ عمر کی موت کی خبر دی۔ 1993 میں ورلڈ ٹریڈ سنٹر سمیت نیو یارک کے مختلف مقامات پر ہونے والے بم دھماکوں میں چھ افراد ہلاک اور ایک ہزار کے قریب زخمی ہو گئے تھے۔  

 

مسلم ممالک پر پابندی، امریکی جامعات ٹرمپ کے فیصلے کی مخالف

واشنگٹن : امریکی صدر کے مسلم ممالک پر پابندی کے حکم نامے کیخلاف امریکا کی 17جامعات نے ٹرمپ کے فیصلے کو عدالت میں چیلنج کردیا ہےامریکی صدر کے مسلم ممالک پر پابندی کے حکم نامے کیخلاف امریکا کی 17جامعات نے ٹرمپ کے فیصلے کو عدالت میں چیلنج کردیا ہے ، جامعات کا کہنا ہے کہ پابندیوں سے مشن کو شدید دھچکا پہنچے گا،نہ صرف علمی بلکہ تحقیقی کام بھی متاثر ہوں گے ۔

فیس بک سے دہشت گردوں کی شناخت ممکن ہو سکے گی

نیویارک(این این آئی)فیس بک کے بانی مارک زکر برگ نے ایک نیا منصوبہ تیار کیا ہے جس کے تحت مصنوعی ذہانت والے سافٹ ویئر زکی مدد سے سائٹ پر پوسٹ کیے جانے والے شدت پسندانہ مواد کا جائزہ لیا جا سکے گا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق انہوں نے اپنے ایک خط میں اس منصوبے کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ بالآخر مصنوعی ذہانت والا سافٹ ویئر ایلگوردمز دہشت گردی، تشدد، غنڈہ گردی جیسے مواد کی نشاندہی کر سکے گا اور اس سے خودکشیاں روکنے میں بھی مدد ملے گی۔تاہم انکا کہنا تھا اس قسم کے سافٹ ویئر کو مکمل طور پر تیار کرنے میں برسوں لگ سکتے ہیں۔اس سے متعلق انہوں نے تقریباً 5500 الفاظ پر مشتمل ایک خط میں تفصیلات کا ذکر کیا ہے ۔ انہوں نے کہا فیس بک پر ہر روز اربوں کی تعداد میں مختلف طرح کے پیغامات اورتبصرے پوسٹ ہوتے ہیں اور ان کا جائزہ لینا تقریباً ناممکن ہے ۔ان کے مطابق اس بارے میں جن پیچیدگیوں کا ہم نے سامنا کیا ہے اس سے کمیونٹی کی نگرانی کرنے کا ہمارا موجودہ طریقہ کار پیچھے رہ گیا ہے ۔مارک زکر برگ نے لکھا کہ ہم ایک ایسے نظام پر تحقیق کر رہے ہیں جو یہ سمجھنے کے لیے پوسٹ کی تحریر پڑھ سکے ، فوٹو اور ویڈیوز کو دیکھ سکے کہ کہیں کچھ خطرناک تو نہیں ہو رہا ۔انہوں نے مزید کہاکہ یہ ابھی بالکل اپنے ابتدائی مرحلے میں ہی ہے لیکن ہم نے اس سے بعض منصوبوں پر کام لینا شروع کردیا ہے اور یہ پہلے ہی سے مواد کی نگرانی کرنے والی ٹیم کے لیے رپورٹ تیار کرنے میں معاون ثابت ہو رہا ہے ۔

امریکا دو ریاستی حل کی حمایت کرتا ہے ، نکی ہیلی

نیو یارک :اقوام متحدہ میں امریکا کی سفیر نکی ہیلی نے کہا ہے کہ امریکا دو ریاستی حل کی حمایت کرتا ہے ، ان باتوں میں سچائی نہیں کہ ٹرمپ انتظامیہ دو ریاستی حل کی حمایت نہیں کرتی ہے ، حتمی فیصلہ اسرائیل اور فلسطین کو کرنا ہے ، ہم صرف اس عمل کی حمایت کرسکتے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق اسرائیل فلسطین کے دیرینہ تنازع پر سلامتی کونسل کے اجلاس میں پہلی بار شرکت کرنے کے بعد نکی ہیلی نے میڈیا کو بتایا کہ امریکا اسرائیل فلسطین تنازع کے دو ریاستی حل کی حمایت کرتا ہے ۔ کوئی بھی جو یہ کہنا چاہتا ہے کہ امریکا دو ریاستی حل کی حمایت نہیں کرتا، یہ ایک غلطی ہے ۔ نکی ہیلی نے یہ بات کئی بار دہرائی کہ ہم مکمل طور پر دو ریاستی حل کی حمایت کرتے ہیں ، تاہم ہم اس کو ایک نئے زاویے سے بھی دیکھ رہے ہیں جس سے ان دو فریقوں کو مذاکرات کی میز پر لایا جا سکے ، جو کچھ ہم کریں ہمیں انہیں اس پر رضامند کرنا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ بالآخر کوئی بھی حتمی حل اسرائیل اور فلسطینی اتھارٹی کی طرف سے آنا ہو گا اور امریکا صرف اس عمل کی حمایت کر سکتا ہے ۔ مشرق وسطیٰ کے امن عمل کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی رابطہ کار نکولے ملاڈینوو نے کہا کہ دونوں عوام کی جائز قومی امنگوں کے حصول کے لیے دو ریاستی حل ہی واحد راستہ ہے ۔

بریگزٹ کیخلاف اٹھ کھڑے ہونیکاوقت آ گیا، ٹونی بلیئر

لندن (دنیا ڈیسک) ٹونی بلیئر نے برطانوی عوام کو یورپی یونین سے علیحدگی کے معاملے پر ذہن تبدیل کرنے کیلئے مائل کرنے کو اپنا مشن قرار دیا ہے ۔ سابق وزیرِ اعظم نے تقریر کرتے ہوئے کہا کہ لوگوں نے ریفرنڈم میں بریگزٹ کی شرائط کے بارے میں معلومات کے بغیر ووٹ دیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ وہ کھائی میں گرنے سے بچنے کا راستہ ڈھونڈنے کیلئے حمایت اکٹھی کر رہے ہیں، تاہم سابق وزیر ڈنکن سمتھ نے کہا کہ بلیئر کا بیان متکبرانہ اور غیر جمہوری ہے ۔

بھارت نے مسعود اظہر کے خلاف ٹھوس ثبوت نہیں دیئے:چین

بیجنگ(آئی این پی )چین نے بھارت پر واضح کیا ہے کہ کالعدم جیش محمد کے سربراہ مولانا مسعود اظہر کو اقوام متحدہ میں دہشت گرد قرار دلوانے کے لیے ٹھوس شواہد فراہم کئے جائیں۔چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق چینی وزارت خارجہ کے ترجمان نے پیغام دیا ہے کہ اگر بھارت اگرچاہتا ہے کہ چین اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں مولانا مسعود اظہر کو دہشت گرد قرار دینے کی بھارتی قرارداد کو قبول کرے تو اس کے لیے بھارت کو ٹھوس شواہد فراہم کرنا ہوں گے ۔ ترجمان نے کہا چین مقصدیت، غیر جانبداری اور پیشہ وارانہ اصولوں کی پالیسی اپنائے ہوئے ہے اور اس پر قائم بھی ہے کیونکہ چین کا معیار اور طریقہ کار صرف یہی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ٹھوس ثبوت نہ ملنے پر قرارداد پر اتفاق رائے کرنا مشکل ہو گا۔ چین